آسٹریلیا کے خلاف پاکستانی بیٹنگ لائن کی ناکامی کی داستان

گزشتہ پچیس سال کی طرح ایک بار پھر دورہ آسٹریلیا پاکستان کے لیے بھیانک خواب ثابت ہوا۔ پاکستانی باؤلرز کے ساتھ بیٹسمین بھی دورہ آسٹریلیا میں ناکام رہے ۔۔ کپتان اظہر علی اور افتخار احمد قابل ذکر کارکردگی نہ دکھاسکے ۔۔ یاسر شاہ کئی بیٹسمینوں سے آگے نظر آئے جبکہ بابر اعظم سب سے کامیاب بیٹسمین رہے۔ کپتان اظہر علی سیریز میں بری طرح ناکام ہوئے ۔ دو میچز کی چار اننگز میں صرف باسٹھ رنز بناسکے ۔ افتخار احمد بولنگ کے ساتھ بیٹنگ میں بھی ٹیم پر بوجھ بنے رہے۔۔ مڈل آرڈر بیٹسمین نے چار اننگز میں 44 رنز اسکور کیے ۔ امام الحق نے ایک ٹیسٹ کھیلا اور پورے دو رنز بنائے ۔ حارث سہیل نے دو اننگز میں نو رنز بنائے ۔ بابر اعظم سب سے کامیاب بیٹسمین رہے۔ چار اننگز میں 210 رنز بناکر سب سے کامیاب بیٹسمین رہے یاسر شاہ نے چار اننگز میں 194 رنز بنائے اور کئی بیٹسمینوں سے آگے رہے۔ شان مسعود نے دو ٹیسٹ میں ایک سو چھپن اور اسد شفیق نے ایک سو بیالیس رنز اسکور کیے۔ وکٹ کیپر بیٹسمین محمد رضوان چار اننگز میں ایک سو ستتر رنز بنانے میں کامیاب ہوئے۔

More Cricket News

Srilanka on Pakistani Soil , a look into the Past

پاک سری لنکا ٹیسٹ سیریز اور آئی سی سی رینکنگ

بنگلہ دیش ٹیم کے دورہ پاکستان کا ممکنہ شیڈول اور وینیوز کے نام سامنے آگئے

ویمنز سیریز: انگلینڈ نے پاکستان کو 75 رنز سے شکست دے دی

پاکستان اور سری لنکا کے درمیان ٹیسٹ سیریز کے لیے کمنٹری پینل اور براڈ کاسٹ پلان تیار

قومی اسٹار کرکٹرز ،راولپنڈی ٹیسٹ کے آغاز کے منتظر